جرم و سزاسٹی

پنجاب بذریعہ بس اسلام آباد اسمگل کئے جانیوالے زندہ جنگلی بٹیروں کے بارہ کریٹس برآمد، اسمگلر گرفتار

صوبہ کے مختلف مقامات سے جنگلی بٹیر کے گیارہ اور تیتر کے تین غیر قانونی شکاریوں کے چالانات۔اڑھائی لاکھ جرمانہ

لاہور(خبر نگار)
سیکرٹری جنگلات، جنگلی حیات و ماہی پروری پنجاب مدثر وحید ملک کی ہدایت پر ڈائریکٹر جنرل جنگلی حیات و پارکس پنجاب مبین الٰہی کی زیر قیادت محکمہ کی صوبہ میں جنگلی حیات کے غیر قانونی شکار اور کاروبار کیخلاف کارروائیاں بدستور جاری ہیں اور جس کے نتیجے میں پنجاب کے شہر ساہیوال سے بذریعہ بس اسلام آباد اسمگل کئے جانیوالے زندہ جنگلی بٹیر کے گیارہ اور تیتر کے تین غیر قانونی شکاریوں کے چالانات، اڑھائی لاکھ روپے جرمانہ عائد۔ تفصیل کیمطابق ڈپٹی ڈائریکٹر وائلڈ لائف ساہیوال ریجن نوید طارق کی سربراہی میں اسسٹنٹ ڈائریکٹر وائلڈ لائف ساہیوال سخی محمد جو ئیہ نے اپنی ٹیم کے ہمراہ ساہیوال /اسلام آباد پر روڈ ناکہ بندی کرکے ایک بس کی تلاشی لی دوران تلاشی اسلام آباد اسمگل کئے جانیوالے زندہ جنگلی بٹیروں کے بارہ کریٹس برآمد کرکے ایک ملزم کو گرفتار کرلیا۔ ملزم کے خلاف وائلڈ لائف ایکٹ کی خلاف ورزی پر چالان مرتب کرکے دس ہزار روپے محکمانہ معاوضہ کی مد میں جرمانہ کیا اور تحویل میں لئے گئے تمام پرندے قدرتی ماحول میں آزاد کردیئے گئے۔ ایسی ہی ایک کامیاب کارروائی کے دوران اسسٹنٹ ڈائریکٹر وائلڈ لائف بہاولپور قاسم رضا نے اپنی ٹیم کے ہمراہ ناجائز شکار تیتر کرنے پر دو شکاری گرفتار کرکے انہیں نوے ہزار روپے محکمانہ معاوضہ کی مد میں جرمانہ کیا اور ہنٹنگ گیئرز ضبط کرلئے۔ اسیطرح اسسٹنٹ ڈائریکٹر وائلڈ لائف چکوال عدنان علی نے جنگلی بٹیر کے دو جبکہ تیتر کا ایک شکاری معہ جال و رسہ تحویل میں لیکر تینوں کو مجموعی طور پر پینسٹھ ہزار روپے محکمانہ معاضہ کی مد میں جرمانہ کیا نیز اسیطرح کی چند دیگر کامیاب کارروائیوں کے دوران اسسٹنٹ ڈائریکٹر وائلڈ لائف بہاولنگر منور حسین نجمی نے اپنی ٹیم کے ہمراہ ضلع کے مختلف مقا مات سے جنگلی بٹیر وغیرہ کے نو غیر قانونی شکاریوں کے چالان کرکے آٹھ کمپاؤنڈ کئے اور انہیں نواسی ہزار روپے محکمانہ معاوضہ کی مد میں جرمانہ کرکے کیس نمٹا دیئے۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Related Articles

Back to top button