پاکستانتعلیمسٹیسیاستصحت

صوبائی وزیر صحت ڈاکٹر جاوید اکرم کی پنجاب ارلی چائلڈہڈ ڈویلپمنٹ کی ورکشاپ کے افتتاحی سیشن میں بطور مہمان خصوصی شرکت

ایک بچے کی بہتر نشوونما کیلئے بریسٹ فیڈنگ کو بنیادی حیثیت حاصل ہے

بچے کی صحت کیلئے زندگی کے پہلے پانچ سال سنہری ہوتے ہیں. حکومت پنجاب ماں اور بچہ کی صحت کو یقینی بنانے کیلئے بنیادی اقدامات اٹھا رہی ہے۔پروفیسر ڈاکٹر جاویداکرم

لاہور(خبر نگار)نگران صوبائی وزیر صحت پروفیسر ڈاکٹر جاوید اکرم نے یونیورسٹی آف چائلڈ ہیلتھ سائنسز میں پنجاب ارلی چائلڈہڈ ڈویلپمنٹ کی تین روزہ ورکشاپ کے افتتاحی سیشن میں بطور مہمان خصوصی شرکت کی۔اس موقع پر یونیسف سے ڈاکٹر صباحت عنبرین اور ڈاکٹر عظمیٰ، ایم ڈی چلڈرن ہسپتال پروفیسر ڈاکٹر ٹیپو سلطان، رجسٹرار پروفیسر ڈاکٹر جنید رشید، پروفیسر نعیم ظفر، خدیجہ خان، فیکلٹی ممبران اور طلباء و طالبات کی کثیر تعداد نے شرکت کی۔
نگران صوبائی وزیر صحت پروفیسر ڈاکٹر جاوید اکرم نے کہاکہ ماں کے پیٹ میں ایک بچے کی صحت بہت اہم ہوتی ہے۔بچے کی صحت کیلئے زندگی کے پہلے پانچ سال سنہری ہوتے ہیں۔حکومت پنجاب ماں اور بچہ کی صحت کو یقینی بنانے کیلئے بنیادی اقدامات اٹھا رہی ہے۔ پروفیسر ڈاکٹر جاوید اکرم نے کہاکہ پاکستان میں موروثی بیماریوں کی شرح بہت زیادہ ہے۔ دس سے بارہ سال کی عمر میں بیماری کی تشخیص سے بہت دیر ہو چکی ہوتی ہے۔ ایک بچے کی بہتر نشوونما کیلئے بریسٹ فیڈنگ کو بنیادی حیثیت حاصل ہے۔ پاکستان میں بریسٹ فیڈنگ کی شرح میں اضافہ ہونا چاہئے۔ صوبائی وزیرصحت نے کہاکہ ہم پنجاب میں سکول سکریننگ پر کام کر رہے ہیں۔وائس چانسلر یونیورسٹی آف چائلڈ ہیلتھ سائنسز کو نیونیٹل سکریننگ کی بھی ہدایت کرتے ہیں۔ صوبائی وزیرصحت ڈاکٹرجاویداکرم نے کہاکہ چلڈرن ہسپتال لاہور بچوں کے علاج کے حوالے سے سب سے بڑی علاج گاہ ہے۔ بچے کی صحت کو یقینی بنانے کیلئے ماں کو آگاہی دینی ہوگی۔ پنجاب میں انسانیت کے دشمنوں اتائیوں کے خلاف بلاامتیاز کارروائی کر رہے ہیں۔ صوبائی وزیرصحت نے کہاکہ بچوں کو خطرناک بیماریوں سے بچانے کیلئے جدید ریسرچ کرنا ہو گی۔ وزیر اعلیٰ پنجاب سید محسن نقوی بھی مختلف اضلاع میں چلڈرن ہسپتال بنانا چاہتے ہیں۔نگران صوبائی وزیرصحت ڈاکٹرجاویداکرم نے بچوں کی نشوونما کے حوالے سے تربیتی ورکشاپ کے انعقاد پر یونیورسٹی آف چائلڈ ہیلتھ سائنسز اور یونیسف کی کاوش کو بے حد سراہا۔ وائس چانسلر یونیورسٹی آف چائلڈ ہیلتھ سائنسز پروفیسر ڈاکٹر مسعود صادق نے کہاکہ ہر ضلع میں ایسا ہی چلڈرن ہسپتال ہونا چاہئے۔ ہمیں پاکستان میں بچوں کے علاج کو مزید بہتر بنانا ہے۔ معصوم بچوں کے علاج میں کوتاہی کسی مجرمانہ غفلت سے کم نہیں ہے۔وائس چانسلر یونیورسٹی آف چائلڈ ہیلتھ سائنسز پروفیسر ڈاکٹر مسعود صادق نے بچوں کے علاج کیلئے نگران صوبائی وزیر صحت پروفیسر ڈاکٹر جاوید اکرم کی کاوشوں کو بے حدسراہااوریونیسف کو بہترین ورکشاپ کے انعقاد پر مبارکباد دی۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Related Articles

Back to top button