سٹیسیاست

دسمبر میں یوریا کی سب سے زیادہ کھپت ہوتی ہے۔ کمشنر لاہور

یوریا کی بڑی ذخیرہ انداوزی کا واقعہ پیش آیا، تمام سٹاک واگزار کرا لیا۔

لاہور (خبرنگار)کمشنر لاہور محمد علی رندھاوا کی زیر صدارت یوریا دستیابی اور ریونیو اہداف کے حوالے سے اجلاس منعقد ہوا۔ کمشنر لاہور کو بریفنگ میں بتایا گیا کہ دسمبر میں یوریا کی سب سے زیادہ کھپت ہوتی ہے۔ لاہور ڈویژن میں دستیابی میں کوئی کمی نہیں رہی۔ کمشنر لاہور نے کہا کہ یوریا کی بڑی ذخیرہ انداوزی کا ایک واقعہ پیش آیا۔ تمام سٹاک واگزار کرا لیا۔ سرکاری نرخوں پر فروخت کردی گئی۔ یوریا فراہمی و دستیاب اطمینان بخش ہے۔ زیادہ قیمتوں پر بھی کریک ڈاون کیا جائے۔ اجلاس میں تمام اضلاع کے ڈی سی ز نے شرکت کی۔کمشنر لاہور نے تمام زرعی افسرن سے فیڈ بیک لیا۔ کمشنر لاہور نے کہا کہ تمام ڈیلرز سے یوریاکھاد کی سپلائی ڈیکلیئر کرائیں۔ سرکاری قیمت پر فرخت ہوگی۔ ڈی سیز کھاد کمپنیوں کو چھوٹے ڈیلرز کو بھی یوریا فراہمی پرلے کر آئیں۔ کمشنر لاہور کو بریفنگ میں بتایا گیا کہ کھاد کمپنیوں نے پچھلے 3ماہ کا بیک لاگ بڑے ڈیلرز کو فراہم کرنا شروع کردیا۔ کمشنر لاہور نے کہا کہ نگران حکومت پنجاب کی واضح ہدایت ہے۔ کسان کو یوریا فراہمی کو نوٹیفائیڈ ریٹ پر یقینی بنائیں گے۔ یوریا ذخیرہ اندوزی یا ناجائز منافع خوری پر سپیشل برانچ کی رپورٹ پر کریک ڈاون جاری رہے گا۔ ریونیو اہداف میں اے آئی ٹی، آبیعانہ، گرداوری، سٹیمپ ڈیوٹی، کھیوٹ انتقال اور ریونیو ریکوری کا تفصیلاً جائزہ لیا گیا۔ کمشنر لاہور نے ڈی سیز کو ہدایت کی کہ ای رجسٹریشن پر پوراً فوکس کریں۔ شہریوں کیلئے ای رجسٹریشن بہت بڑی سہولت ہے۔ اجلاس میں ایڈیشنل کمشنر عبداسلام عارف ڈی سی لاہور رافعہ حیدر، ایڈیشنل کمشنر حامد ملہی، ڈی سی قصور محمد ارشد بھٹی، ڈی سی ننکانہ محمد ارشد چوہدری، ڈی سی شیخوپورہ ڈاکٹر وقار، اے سی آر اظہارالحق، ڈائریکٹر لائیوسٹاک ڈاکٹر شیر محمد شیراوت و دیگر افسران نے شرکت کی۔

94 Comments

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Related Articles

Back to top button