سٹی

چیئرمین بور ڈ آف ڈائریکٹرمیاں حافظ نعمان اور چیف ایگزیکٹو لیسکو انجینئر شاہد حیدر کی زیر صدارت پروجیکٹ مینجمنٹ یونٹ کا اجلاس

لاہور (خبرنگار)چیئرمین بور ڈ آف ڈائریکٹرمیاں حافظ نعمان اور چیف ایگزیکٹو لیسکو انجینئر شاہد حیدر کی زیر صدارت پروجیکٹ مینجمنٹ یونٹ کا اجلاس ہوا جس میں ممبر بورڈ آف ڈائریکٹر فیصل ایوب کھوکھر، ممبر بورڈ آف ڈائریکٹر محمود اختر گورائیہ، چیف انجینئر پروجیکٹ مینجمنٹ یونٹ طاہر میو، ڈائریکٹر پروجیکٹ مینجمنٹ یونٹ شعیب عاصم، پروگرام ڈائریکٹر جی ایس سی ملک زاہد کھوکھر، پروگرام ڈائریکٹر کنسٹریکشن فاروق نے شرکت کی۔
اس موقع پر چیئر مین بورڈ آف ڈائریکٹر لیسکو اور چیف ایگزیکٹو لیسکو کو مختلف منصوبوں پر بریفننگ دی گئی، چیئر مین بورڈ آف ڈائریکٹر لیسکو اور چیف ایگزیکٹو لیسکونے متعلقہ حکام کو منصوبوں میں موجود خامیوں سے آگاہ کیا اور ان خامیوں کو فوری طور پر دور کرنے کی بھی ہدایت کی۔دوران اجلاس مستقبل میں بجلی کے ترسیلی نظام کو زیر زمین کرنے کے حوالے سے بھی تفصیلی گفتگو کی گئی۔
اجلاس کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے چیئرمین بورڈ آف ڈائریکٹر میاں حافظ نعمان کا کہنا تھا کہ لیسکو نے 66کے وی اے کے سسٹم کو مکمل طور 132کے وی اے پر منتقل کردیا ہے جو کہ ایک کارنامہ ہے، اس کارنامے کو سرانجام دینے میں لیسکو کے پروجیکٹ مینجمنٹ یونٹ نے مرکزی کردار ادا کیا ہے، پاکستان کی کوئی بھی دوسری ڈسٹری بیوشن کمپنی مکمل طور پر 132کے وی پر منتقل نہیں ہوئی ہے۔
انہوں نے کہا ہے کہ وفاقی ادارے این پی سی سی کی جانب سے دی جانیوالی سفارشات پر من و عن عمل درآمد کردیا گیا ہے، این پی سی سی کی جانب سے لیسکو کو 16اہداف دیئے گئے تھے جنہیں حاصل کرلیا گیا ہے۔انہوں نے کہاکہ یہ تاثر درست نہیں کہ لیسکو کا سسٹم زیادہ کپسٹی نہیں رکھتا جس کی وجہ سے ہیٹ ویو کے دوران لوڈ شیڈنگ ہوتی ہے، لیسکو سسٹم کی کپسٹی 13800میگا واٹ سے زائد ہے جبکہ ہیٹ ویو کے دوران بجلی کی طلب صرف 6ہزار میگا واٹ تک ہوتی ہے۔ ہیٹ ویو کے دوران لوڈ شیڈنگ ہونے کی وجہ این ٹی ڈی سی کے سسٹم کا پرانا ہونا ہے، حکومت این ٹی ڈی سی کے سسٹم کو بھی اپ گریڈ کر رہی ہے، اس سلسلے میں نئے ٹرانسفارمر بھی لگائے جارہے ہیں۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Related Articles

Back to top button