پاکستانتعلیمسٹی

کنگ ایڈورڈ میڈیکل یونیورسٹی کے زیر انتظام آلائیڈ ہیلتھ سائنسز گریجویٹس کے پہلے کانووکیشن کا انعقاد

ڈاکٹر کی کامیابی اس کے مریضوں کی دعاؤں میں چھپی ہوتی ہے جاوید اکرم وزیر صحت

کانووکیشن میں 124 طلبا و طالبات کو گولڈ میڈل اور 102 کو سلور میڈلز دیئے گئے 72 طالبعلموں نے پہلی 3 پوزیشنز حاصل کیںوی سی پروفیسر ڈاکٹر محمود ایاز پرو وائس چانسلر پروفیسر اعجاز حسین، ڈین آلائیڈ ہیلتھ سائنسز،رجسٹرار پروفیسر سید اصغر نقی، پروفیسر محمد معین، پروفیسر صائمہ امیر، پروفیسر عرفان عظمت اللہ خواجہ، پروفیسر علی مدیحہ ہاشمی کی شرکت

لاہور (خبر نگار) کنگ ایڈورڈ میڈیکل یونیورسٹی کے زیر انتظام آلائیڈ ہیلتھ سائنسز گریجویٹس کے پہلے کانووکیشن کا انعقاد کیاگیا۔کانووکیشن کے مہمان خصوصی نگران صوبائی وزیر صحت پروفیسر ڈاکٹر جاوید اکرم تھے۔وائس چانسلر پروفیسر ڈاکٹر محمود ایاز نے وزیر صحت پنجاب کو پھولوں کا گلدستہ پیش کرکے استقبال کیا۔اس موقع پر پرو وائس چانسلر پروفیسر اعجاز حسین، ڈین آلائیڈ ہیلتھ سائنسز،رجسٹرار پروفیسر سید اصغر نقی، پروفیسر محمد معین، پروفیسر سائمہ امیر، پروفیسر عرفان عظمت اللہ خواجہ، پروفیسر علی مدیحی ہاشمی اور دیگر فیکلٹی ممبران نے شرکت کی۔ڈاکٹر محمد ذیشان سرور نے آلائیڈ ہیلتھ سائنسز گریجوایٹس سے خدمت انسانیت کا حلف لیا۔نگران صوبائی وزیر صحت پروفیسر ڈاکٹر جاوید اکرم نے نمایاں طلبا و طالبات میں گولڈ میڈلز اور ڈگریاں تقسیم کیں۔وائس چانسلر کنگ ایڈورڈ میڈیکل یونیورسٹی پروفیسر ڈاکٹر محمود ایاز نے ادارے کی کارکردگی اور مختلف پروگراموں پر تفصیلی روشنی ڈالی۔
نگران صوبائی وزیر صحت پروفیسر ڈاکٹر جاوید اکرم نے کانووکیشن کے شرکاء سے اپنے خطاب میں کہاکہ خوابوں کی تعبیر کیلئے ہمیشہ بڑے خواب دیکھنے چاہئیں۔ ایک ڈاکٹر کی کامیابی اس کے مریضوں کی دعاؤں میں چھپی ہوتی ہے۔ پروفیسر ڈاکٹر جاوید اکرم نے کہاکہ مجھے کیمکولین ہونے پر فخر ہے۔ آج ہم جس مقام پر ہیں یہ ہماری تمام تر کامیابیاں ہمارے والدین کی وجہ سے ہیں۔ اللہ تعالیٰ ہمیں پاکستان کی حقیقی معنوں میں خدمت کرنے کی توفیق عطاء فرمائے۔نگران صوبائی وزیرصحت ڈاکٹرجاویداکرم نے کہاکہ پنجاب کی طبی درسگاہوں میں کوالٹی ریسرچ پر خاص توجہ دی جا رہی ہے۔ وزیر اعلیٰ پنجاب سید محسن نقوی کے ویژن کے مطابق عوام تک صحت کی بہتر سہولیات فراہم کرنے کیلئے کوشاں ہیں۔صوبائی وزیرصحت ڈاکٹرجاویداکرم نے کامیاب ہونے والے آلائیڈ ہیلتھ سائنسز گریجوایٹس اور ان کے والدین کو مبارکباد دی۔وائس چانسلر پروفیسر محمود ایاز نے کہاکہ کانووکیشن میں 124 طلبا و طالبات کو گولڈ میڈل اور 102 کو سلور میڈلز دیئے گئے 72 طالبعلموں نے پہلی 3 پوزیشنز حاصل کیں جبکہ کل 555 امیدواران کامیاب ہوئے ۔میں تمام طلباو طالبات کو آلائیڈ ہیلتھ سائنسز کے پہلے کانووکیشن پر خوش آمدید اور مبارکباد دیتا ہوں۔ اس کانووکیشن کے انعقاد پر میں خاص طور پر ڈین آلائیڈ ہیلتھ سائنسز پروفیسر سید اصغر نقی کو مبارکباد دیتا ہوں جن کی خصوصی کاوشوں سے ایسا ممکن ہو سکا ۔ پروفیسر ڈاکٹر محمود ایاز نے کہاکہ ڈئیر گریجویٹس آپ نے جس طبی درسگاہ میں تعلیم حاصل کی آپ بھی اسی ادارے کے قابل فخر ایلومینائی ہیں۔ آپ جہاں بھی جائیں گے کیمکلولینز کے نام سے جانے جائیں گے۔ دکھی انسانیت کی خدمت میں کوئی کسر نہ چھوڑیں اس کا صلہ دنیا میں بھی ہے اور آخرت میں بھی انہوں نے مزید کہا کہ کسی دردمند کے کام آنے کو اپنے لئے سنہری موقع سمجھیں اور اس کی مدد کریں۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Related Articles

Back to top button