سٹیصحت

12 ویں سی اوز ہیلتھ کانفرنس کا انعقاد

ہپستالوں کی کارکردگی مانیٹر کرنے کیلئے اچانک دورے کرتا رہوں گا، شکایت کی صورت میں سی ای او ہیلتھ ذمہ دار ہوگا۔ڈاکٹر جمال ناصر

لاہور(خبر نگار)صوبائی وزیر پرائمری اینڈ سیکنڈری ہیلتھ کیئر ڈاکٹر جمال ناصر نے کہا ہے کہ سرکاری ہسپتالوں کی پتھالوجی لیبز کی صورتحال بڑی مایوس کن ہے جنہیں بہتر بنانے کے لئے پتھالوجسٹس کی کپیسٹی بلڈنگ کی ضرورت ہے۔ہسپتالوں کی کارکردگی مانیٹر کرنے کے لئے اچانک دورے کرتا رہوں گا۔ کسی شکایت یا غفلت کی صورت میں متعلقہ سی ای او ہیلتھ ذمہ دار ہوگا۔صوبائی وزیر صحت ڈاکٹر جمال ناصر علی جان خان کے ہمراہ 12 ویں چیف ایگزیکٹو آفیسرز (سی ای اوز) ہیلتھ کانفرنس سے خطاب کر رہے تھے۔کانفرنس میں تمام سی ای اوز ہیلتھ کی مارچ 2023 کی کارکردگی کا تفصیلی جائزہ لیا گیا۔پرائمری روڈ میپ، ادویات کی دستیابی، پولیو، کورونا کی صورتحال اور ورٹیکل پروگرامز کی کارکردگی کو مد مدنظر رکھ کر جائزہ لیا گیا۔کارکردگی میں آئی ٹی کا استعمال، ٹی بی، ہیپاٹائیٹس، ایڈز کنٹرول پروگرامز، نان کمیونیکبل ڈیزیز، BERC اور بنیادی مراکز صحت اور دیہی مراکز صحت میں عدم دستیاب سہولتوں کے معاملات بھی زیر بحث آئے۔صوبائی وزیر صحت ڈاکٹر جمال ناصر نے کہا کہ دس اضلاع کے مراکز صحت میں حاملہ اور دودھ پلانے والی خواتین کو کورس مکمل کرنے پر 17000 روپے سے بڑھاکر 23000 ہزار روپے کی امدادی رقم دی جارہی ہے۔انہوں نے کہا کہ ان مراکز صحت پر خواتین کو آغوش پنجاب پروگرام کے تحت پہلے وزٹ پر 5000 روپے دیے جارہے ہیں۔صوبائی وزیر صحت کا کہنا کہ پنجاب میں پولیو کا کوئی کیس رپورٹ نہیں ہوا تاہم 2023 میں خیبر پختونخوا میں ایک کیس رپورٹ ہوگیا ہے۔انسداد پولیو میں پنجاب کے تمام ٹرانزٹ پوائنٹس پر مانیٹرنگ بڑھائی جائے۔ڈاکٹر جمال ناصر نے کہا کہ اگلے ماہ انسداد پولیو مہم کے دوران بچوں کی ویکسینیشن کے ڈیٹا کو روزانہ کی بنیاد پر ڈیش بورڈ پہ اپلوڈ کیا جائے۔صوبائی وزیر صحت نے ہدایت کی ڈینگی کی روک تھام کے لئے سرویلنس، فوگنگ سرگرمیاں تیز کی جائیں۔ایم ایس صاحبان اپنے ہسپتالوں کے اشوز فوری حل کرنے میں احساس ذمہ داری کا مظاہرہ کریں۔ڈاکٹر جمال ناصر نے کہا کہ سٹورز میں ناکارہ گاڑیوں، سامان، پارٹس کو ضابطہ کار کے مطابق نیلامی کا عمل فوری شروع کیا جائے۔انہوں نے کہا کہ ماہانہ کانفرنس کے انعقاد کا مقصد ہپستالوں کے معاملات کا جائزہ اور انکے حل کے لئے گائیڈ لائن فراہم کرنا ہوتی ہیں۔اس موقع پر سیکرٹری صحت علی جان خان نے کہا گزشتہ ماہ 100 ہیلتھ فیسلیٹیز کے دورے کئے گئے، طبی سہولیات کا جائزہ لیا گیا۔انہوں نے کہا کہ رورل ہیلتھ ایمبولینس سروس کے تحت خواتین کو دی جانے والی سہولیات کا دائرہ کار بڑھایا جارہا ہے۔انہوں نے کہا کہ صحت سہولت پروگرام کے تحت ہسپتالوں میں زیادہ مریض داخل کئے جائیں۔ایم ایسز کو ہدایت دیتے ہوئے علی جان خان نے کہا کہ ڈیزیز کیلنڈر ماہانہ کی بنیاد پر تمام ہسپتالوں میں عملدرآمد کو یقینی بنایا جائے۔سیکرٹری صحت نے کہا کہ گزشتہ سال کے دوران ڈینگی کی اموات کا کلینیکل آڈٹ جلد مکمل کرلیا جائے گا۔صوبائی وزیر صحت اور سیکرٹری صحت کی جانب سے سی ای اوز کانفرنس کے انعقاد پر محکمہ صحت کی انتظامیہ کو مبارکباد دی گئی۔اس موقع پر سیکرٹری صحت جنوبی پنجاب حیات محمد، سپیشل سیکرٹری عمارہ خان، ڈی جی ڈرگ کنٹرول محمد سہیل، ڈائریکٹر جنرل ہیلتھ سروسز ڈاکٹر الیاس گوندل اور ایڈیشنل سیکرٹریز، ڈائریکٹرز ای پی ائی، ٹی بی کنٹرول، ہیپاٹائیٹس، ایڈز کنٹرول پروگرامز، پراجیکٹ ڈائریکٹرز IRMNCH، HCIP اور HISDU اور
تمام اضلاع کے سی ای اوز ہیلتھ موجود تھے۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Related Articles

Back to top button