پاکستانسیاست

الیکشن کی تاریخ دینے کا اختیار روپا قانون کے تحت الیکشن کمیشن کے پاس تھا

1985 ضیا مارشل لا کے دور میں یہ اختیار الیکشن کمیشن سے لے لیا گیا۔ خط کا متن

اسلام آباد( خبر نگار) الیکشن کمیشن آف پاکستان کے مطابق
الیکشن کی تاریخ دینے کا اختیار روپا قانون کے تحت الیکشن کمیشن کے پاس ہی تھا

بعد ازاں 1985 ضیا مارشل لا کے دور میں یہ اختیار الیکشن کمیشن سے لے لیا گیا

ڈسکہ اور دیگر اہم کیسز میں الیکشن کمیشن کا اختیار ختم کیا گیا ۔

بدعنوان افسران کے خلاف انکوائری کو ختم کیا گیا اور ان کو سٹے دیا گیا

اس سے الیکشن کمیشن کی رٹ کمزور ہوئی۔

بیوروکریسی کو یہ میسج دیا گیا کہ آپ بدعنوانی کریں گے تو الیکشن کمیشن آپ کا کچھ نہیں بگاڑ سکتا

جبکہ کمیشن کو مختلف آرڈرز کے ذریعے کمزور کیا گیا۔ کیا کمیشن کے لئے صاف شفاف غیر جانبدارانہ انتخابات کے انعقاد کے لئے اسی حکومتی مشنری ( آر او ، ڈی آر او ) سے اپنی رٹ قائم کروانا ممکن ہوگا ؟

صاف شفاف انتخابات کے لئے جو اختیار الیکشن کمیشن کو تھا وہ رفتہ رفتہ ختم کیا گیا

اب الیکشن کمیشن سیکشن 57 ، 58 میں ترمیم تجویز کررہا ہے تاکہ ، 1976 کے قانون میں دئے گئے اصل اختیارات کو واپس لیا جائے ۔ اور ملک میں صاف شفاف انتخابات کا انعقاد یقینی بنایا جاسکے

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Related Articles

Back to top button