جرم و سزاسٹی

آئی جی پنجاب کی 50 کامن سے تعلق رکھنے والے 14 اے ایس پیز سے سنٹرل پویس آفس میں ملاقات

آئی جی پنجاب نے پولیس فورس کا حصہ بننے والے نوجوان افسران کو اپنی ٹریننگ بھرپور توجہ سے مکمل کرنے کی ہدایت کی۔

پولیس سروس ایک چیلنجنگ کیرئیر ہے جس میں شہریوں کی خدمت اور حفاظت کی ذمہ داری آپ پر آئے گی۔آئی جی پنجاباپنی قابلیت، پیشہ ورانہ مہارت اور جذبہ خدمت خلق سے شہریوں کو بہترین سروس ڈلیوری کی فراہمی کو اولین مقصد بنائیں۔ ڈاکٹر عثمان انور

لاہور (خبر نگار)انسپکٹر جنرل پولیس پنجاب ڈاکٹر عثمان انور نے کہا ہے کہ پولیس سروس ایک ایسا کیرئیر ہے جس کا حصہ بننے والے افسران و اہلکار فرائض کی ذمہ دارانہ ادائیگی سے بہترین کیرئیر گروتھ کے ساتھ ساتھ دنیا و آخرت کی کامیابیاں حاصل کر سکتے ہیں۔ آئی جی پنجاب نے کہا کہ نوجوان پولیس افسران نے مستقبل میں فیلڈ ڈیوٹی کے دوران کمانڈنگ کردار ادا کرنا ہے لہذا پولیس فورس کا حصہ بننے والے نوجوان افسران اپنی قابلیت، پیشہ ورانہ مہارت اور جذبہ خدمت خلق سے شہریوں کو بہترین سروس ڈلیوری اپنا اولین مقصد بنائیں۔ ڈاکٹر عثمان انور نے کہا کہ کیرئیر کے آغاز میں مشکل پوسٹنگ کو ترجیح دیں تاکہ آپ مستقبل کے چیلنجنگ سے بہتر طور پر نبرد آزما ہوسکیں۔ ڈاکٹر عثمان انور نے ہدایت کی کہ ماتحت سٹاف کے ساتھ قریبی رابطہ رکھیں اور کامیاب کمانڈر کے طور پر ان سے بہترین پرفارمنس لیں۔ انہوں نے کہا کہ مستقبل آئی ٹی بیسڈ پولیسنگ کا ہے، جدید پولیسنگ کی مہارتوں اور انفارمیشن ٹیکنالوجی سے خود کو بہتر طور پر ہم آہنگ کریں۔ آئی جی پنجاب نے کہا کہ پولیسنگ ایک چیلنجنگ کیرئیر ہے جس میں شہریوں کی خدمت اور حفاظت کی ذمہ داری آپ پر آئے گی لہذا بیواؤں، بزرگوں اور غریب و بے سہارا شہریوں کو انصاف کی کیلئے کوئی کسر اٹھا نہ رکھیں۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے آج سنٹرل پولیس آفس میں 50 ویں کامن میں شامل 14 اے ایس پیز سے ملاقات کرتے ہوئے کیا۔ تفصیلات کے مطابق 50 ویں کامن سے تعلق رکھنے والے 14 اے ایس پیز نے پنجاب پولیس میں جوائننگ دے دی جو نیشنل پولیس اکیڈمی میں ٹریننگ مکمل کریں گے۔ آئی جی پنجاب نے پولیس فورس کا حصہ بننے والے نوجوان افسران کو اپنی ٹریننگ بھرپور توجہ سے مکمل کرنے کی ہدایت کی۔ نوجوان افسران نے آئی جی پنجاب کے ویژن کے مطابق پبلک سروس ڈلیوری اور جرائم کے قلع قمع کے عزم کا اعادہ کیا۔ اس موقع پر ڈی آئی جی ہیڈ کوارٹرز ہمایوں بشیر تارڑ سمیت دیگر افسران بھی موجود تھے۔

مزید برآں آئی جی پنجاب کی ہدایت پر پولیس ٹریننگ کالج چوہنگ لاہور میں پنجاب پولیس کے تفتیشی افسران کی استعداد کار میں اضافے کیلئے تربیتی ورکشاپ کا انعقاد کیا گیا جس میں صوبے کے تمام اضلاع سے 50 فوکل پرسنز اور تفتیشی افسران نے شرکت کی۔ انویسٹی گیشن برانچ پنجاب کے سینئر افسران نے بیرون ملک مفرور اشتہاریوں کے ریڈ نوٹسز کی دستاویزت مکمل کرنے کے حوالے سے شرکاء کو تربیت دی۔ دوران ورکشاپ انسٹرکٹرز نے پاسپورٹ کنٹرول لسٹ، ایگزٹ کنٹرول لسٹ اور ریڈ نوٹس کی تیاری اور اجراء کے طریقہ کار بارے مکمل آگاہی دی۔ تفتیشی افسران اور فوکل پرسن نے بین الاقومی سطح پر ملزموں کی گرفتاری اور حوالگی مجرمان بارے عملی تربیت حاصل کی۔ سینئر افسران نے ریڈ نوٹس، بلیو نوٹس، گرین نوٹس سمیت فوجداری مقدمات کے دیگر نوٹسز کے اجراء اور ڈیپورٹ کیلئے فائل تیاری بارے لیکچرز دئیے گئے۔ آئی جی پنجاب نے کہا کہ تفتیشی افسران کی پیشہ ورانہ قابلیت اور استعداد کار میں اضافہ اولین ترجیحات میں شامل ہے اورایسی ورکشاپ تفتیشی افسران کی غیر ملکی قوانین سے آگاہی اور مجرمان کی گرفتاری میں معاون ثابت ہوتی ہیں۔

ڈاکٹر عثمان انور نے کہا کہ تفتیشی افسران سنگین جرائم میں مطلوب بیرون ملک مفرور ملزمان کی گرفتاری کیلئے کاوشوں میں مزید تیزی لائیں اور انٹر پول، ایف آئی اے اور متعلقہ ممالک کے ایمبیسی کے ساتھ ورکنگ ریلیشن شپ کو مزید مضبوط بنایا جائے۔ آئی جی پنجاب نے کہا کہ تفتیشی افسران کی استعداد کار میں اضافے کیلئے ہر سطح پر ٹریننگ ورکشاپس اور ریفریشر کورسز کا سلسلہ جاری رکھا جائے گا۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Related Articles

Back to top button