سٹیصحت

76واں یوم آزادی:جنرل ہسپتال میں پر وقار تقریب، پرنسپل پروفیسر الفرید ظفر نے پرچم کشائی کیزندہ قومیں آگے بڑھنے کیلئے ماضی کے سنہری ایام کو مشعل راہ بناتی ہیں

پرنسپل پی جی ایم آئی نرسنگ طالبات نے قومی ترانہ پڑھا ، سبز دوپٹے اوڑھ کر ماحول کو وطن کی محبت کے رنگ میں رنگ دیا

پاکستان ہیلتھ سپورٹ ایسوسی ایشن کے صدر رانا پرویز ، صدر وائی این اے خالدہ تبسم ، ہیلتھ پروفیشنلز کی بھرپور شرکت. ملی نغمے کی دھن پر سبز ہلالی پرچم کو سلامی ، ملکی سلامتی کیلئے دعائیں،تقریب میں کیک کاٹا گیا

لاہور (خبرنگار)76ویں یوم آزادی کے موقع پر لاہور جنرل ہسپتال میں پر وقار تقریب کا انعقاد کیا گیا جس میں پرنسپل پی جی ایم آئی پروفیسرڈاکٹر محمد الفرید ظفرنے پروفیسر صاحبان،ایم ایس پروفیسر ندرت سہیل اور ہیلتھ پروفیشنلز کے ہمراہ پرچم کشائی کی، نرسنگ طالبات نے ترنم کے ساتھ قومی ترانہ پڑھا اور حاضرین نے بھی یک زبان ہو کر ان کا ساتھ دیا ۔ اس موقع پر ملی نغمے کی دھن پر سبز ہلالی پرچم کو سلامی بھی دی گئی جبکہ نرسنگ طالبات نے جشن آزادی کی خوشی میں سبز دوپٹے اوڑھ کر ماحول کو وطن کی محبت کے مقدس رنگ میں رنگ دیا جسے شرکاء نے بے حد سراہا اور انہیں داد دی۔
تقریب سے خطاب کرتے ہوئے پروفیسرالفرید ظفر نے کہا کہ زندہ قومیں آگے بڑھنے کے لیے اپنے ماضی کی شاندار روایات، قربانیوں اور جدوجہد کے سنہری ایام کو مشعل راہ بنا تی ہیں اور14 اگست کا تاریخی دن ہمارے لیے جہاں خوشیوں اور مسرت کا پیغام لاتا ہے وہیں یہ دن باہمی ایثار و محبت اور قومی یگانگت کے لیے تجدید عہد کا بھی تقاضہ کرتا ہے۔انہوں نے کہا کہ قائد اعظم کے سنہری اصولوں، اتحاد،ایمان اور تنظیم کو اپنے سبز ہلالی پرچم تلے عملی جامہ پہنا کر ہم آج بھی گزشتہ 76 سالوں کی محرومیوں کو ترقی و خوشحالی کی روشنیوں میں بدل سکتے ہیں۔ اس موقع پر پاکستان ہیلتھ سپورٹ ایسوسی ایشن کے صدر رانا پرویز،صدر وائی این اے خالدہ تبسم،شہناز ڈار ، نرسز اور ملازمین بڑی تعداد میں موجود تھے ۔
پرنسپل پی جی ایم آئی کا مزید کہنا تھا کہ یہ وہ دن ہے جب ہمیں ناانصافی، نفرت، تنگ نظری اور جبر سے آزادی نصیب ہوئی ہے اوریہ تاریخ ساز دن ہمیں آزادی کے لئے دی جانے والی قربانیوں کی یاد بھی دلاتا ہے۔انہوں نے کہا کہ یہ ملک ہمیں اتفاقاً نہیں ملا بلکہ اس کے لئے جرأت و بہادری کی ان گنت داستانیں رقم کی گئیں، بے شمار دل سوز و دل گزراواقعات سے اس کی بنیادوں کو سیراب کیا گیااورکتنے ہی باپ، بیٹوں، ماؤں اور بہنوں نے اپنی جانوں کے نذرانے پیش کئے تب جاکر کہیں یہ وطن حاصل ہوا۔ پروفیسر الفریدظفرنے کہا کہ یہ وطن کسی نسل، زبان یا سیاسی بنیاد پر قائم نہیں ہوا بلکہ اسے مذہب اور عقیدے کی آزادی کے نام پر حاصل کیا گیا ۔ پاکستان ہیلتھ سپورٹ ایسوسی ایشن کی جانب سے کیک کاٹا گیا جبکہ مریضوں میں مٹھائی تقسیم کی گئی اور تقریب کے اختتام پر ملکی ترقی ، خوشحالی و استحکام کے لئے دعائیں بھی مانگیں گئیں۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Related Articles

Back to top button