سٹیسیاست

نوازشریف قومی لیڈر ، انکی آمد ملکی ترقی کا پیغام ہے ۔ ایڈووکیٹ آصف رجوانہ

پی ٹی آئی نے ملکی معیشیت اورنوجوان نسل برباد کردی ،پی ٹی آئی سلیکشن سے اقتدار میں آئی ۔رہنما مسلم لیگ (ن)

جنوبی پنجاب صوبہ محاذ محض سیاسی نعر، جوکہ دفن ہوچکا جنوبی پنجاب صوبہ انتظامی بنیادوں پر بنایا جائے. سانحہ 9مئی شرمناک ،ان واقعات کے تمام کراداروں کو کیفر کردار تک پہنچانا ضروری ہے ۔ ٹکٹ ہولڈپی پی 214ملتان

لاہور (امداداللہ قریشی )پاکستان مسلم لیگ (ن) کے رہنما اور پی پی214لتان کے ٹکٹ ہولڈر ایڈووکیٹ آصف رفیق رجوانہ نے کہا ہے کہ سابق وزیر اعظم نواز شریف کا شایان شان استقبال کیا جائے گا ،نواز شریف قومی لیڈ ر ہیں انکی آمد ملکی ترقی کا پیغام ہے ، پی ٹی آئ نے ملکی معیشیت اور نوجوان نسل کی بربادی کی ۔ جنوبی پنجاب صوبہ محاذ محض ایک سیاسی نعرہ تھا جوکہ دفن ہوچکا ۔جنوبی پنجاب صوبہ انتظامی بنیادوں پر بننا چاہئے ۔ بزدار کاغذی وزیر اعلی تھے ، عمران خان نے انہیں کام نہیں کرنے دیا ۔ پی ٹی آئی سلیکشن کے ذریعے اقتدار میں آئی ورنہ انکی 50نشستیں بھی نہ ہوتیں ۔ نیب کی بنیاد پولیٹیکل انجینئرنگ ہے ۔ تمام اداروں کو اپنی اپنی حدود میں رہ کر کام کرنا چاہئے ملک کو آگے بڑھانے کے لئے اداروں اور سیاسی پارٹیوں کے درمیان مفاہمت کی ضرورت ہے ۔ 9مئی کے واقعات نے پوری قوم کے سرشرم سے جھکا دئے ان واقعات کے تمام کرداروں کو کیفر کردار تک پہنچانا ضروری ہے۔ پاکستان مسلم لیگ (ن) نے اپنی سیاست کو داو پر لگا کرریاست کو بچایا ۔ ان خیالات کااظہارملتان شہر سے تعلق رکھنے والے سابق گورنر پنجاب رفیق رجوانہ کے بیٹے آصف رفیق رجوانہ نے ’’ روزنامہ قوت و قوت نیوز ویب ‘‘ کو خصوصی انٹرویو دیتے ہوئے کیا آصف رفیق رجوانہ نے مزید کا کہنا تھا کہ نوازشریف کی آمد ملکی ترقی کا پیغام ہے اور وہ واحدقومی لیڈر ہیں جن کی آمد ملکی ترقی کا پیغام ہےاسلئے ان کی آمد پر انکا استقبال شایان شان طریقے سے کیا جائے گا اور نہ صرف جنوبی پنجاب بلکہ پورا ملک انکا استقبال کرے گا انہوں نے مزید کہا کہ پی ٹی آئی نے ملکی معیشت برباد کرکے رکھ دی اور نوجوان نسل تباہ کی انکا کہنا تھا کہ پی ٹی آئی حکومت کی جانب سے 70سال کے مقابلے کے اپنے 4 سالہ دور حکومت میں ریکارڈ قرضے لئے اور ملک کو تباہ حال کیا ۔انہوں نے کہاکہ 9مئی کے واقعات نے پوری قوم کے سر شرم سے جھکا دئے یہ ایک افسوسناک بات تھی جن شہیدوں نے اپنا سب کچھ ملک کے لئے قربان کیا ہم انہیں کیا عزت دی ۔ انہوں نے کہاکہ نو مئی کے واقعات کے تمام کرداروں کو کیفر کردار تک پہنچانا بہت ضروری ہے ۔ ایڈووکیٹآصف رفیق رجوانہ نے مزید کہاکہ سابق وزیر اعلی پنجاب صرف کاغذی وزیر اعلی
تھے اور عمران خان نے انہیں کام نہیں کرنے دیا ۔ انہوں نے کہاکہ بزدار اتنے نالائق نہیں تھے اگر عمران خان ان پر اعتما د کرتے تو حالات قدرے بہتر ہوتے ۔ انہوں نے کہا کہ عثمان بزدار کے وزارت اعلی کے دور میںوزیر اعظم  عمران خان ، علیم خان ، گورنر پنجاب چوہدری سرور ، سپیکر پرویز الہی ، پنکی پیرنی اور فرح گوگی سب ہی وزیر اعلی تھے ۔ انٹرویو میں انہوں نے مزید کہاکہ پی ٹی آئ حکومت ایک سلیکٹڈ حکومت تھی ورنہ پی ٹی آئی سارے ملک میں 50نشستیں بھی حاصل نہ کرسکتی ۔ عمران

خان نے ملک کو چار سال میں تباہ حال کردیا انہوں نے کہاکہ اس کے برعکس مسلم لیگ کی حکومت مرکز میںبالترتیب ڈھائی سال ، تین سال اور چارسال رہی لیکن نواز شریف کی قیاد ت میں ملک ایٹمی طاقت بنا یا ملک میں بجلی بحران ، دہشت گردی جیسا ناسور ختم کیا ملک میں موٹر ویز کا جال بچھا یا ۔

علاوہ ازیں نواز شریف اور شہباز شریف نے ملک میں بے انتہا ترقیاتی کام کئےجنوبی پنجاب میں انہوں نے میٹروبس ،
زرعی یونیورسٹی ، انجینئرنگ یونیورسٹی ، انڈس ہسپتال مظفر گڑھ ، کڈنی سنٹر ملتان ، فارم ٹو مارکیٹ روڈ سمیت بےشمار کام کئے جبکہ اسکے برعکس عمران خان نے کے پی کے میں اپنےدس سالہ دور حکومت میں کوئی کام نہ کیا اور نہ ہی کوئی تبدیلی آئی جبکہ ملک میں ایک بھی ترقیاتی پراجیکٹ نہ لگایا ملک کو بین الاقومی طور پر تنہا کر دیا اورذاتی عناد اور بغض کے ذریعے حکومت چلائی جسکا خمیازہ پوری قوم نے بھگتا ۔ آصف رفیق رجوانہ نے ا یک سوال کے جواب میں کہاکہ تمام اداروں کو اپنی اپنی حدود میں رہ کر کام کرنا چاہئے جبکہ اداروں و سیاسی پارٹیوں کے درمیان مفاہمت بہت ضروری ہے اور مستقل پالیسی ہونی چاہئے تاکہ حکومتیں آتی جاتی بھی رہیں تو پالیسی کا تسلسل قائم رہے ۔تمام سٹیک ہولڈر ملکر ہی ملک کو آگے لے جاسکتے ہیں اور اب ملک مزید افراتفری اور معاشی بدحالی کا متحمل نہیں ہوسکتا۔ایڈووکیٹ آصف رفیق رجوانہ نے کہاکہ جنوبی پنجاب صوبہ لسانی اور سیاسی بنیادوں پر نہیں بلکہ انتظامی بنیادوں پر بننا چاہئے تاکہ جنوبی پنجاب کی عوام کے مسائل انکی دہلیز پر حل ہوسکیں

انہوں نے کہاکہ آئندہ انتخابات میں مسلم لیگ (ن) جنوبی پنجاب میں خاطر خواہ کامیابی حاصل کرے گی جسکی وجہ مسلم لیگ (ن) کی اپنے سابقہ ادوار میںکارکردگی ہے انہوں نے کہا اسی لئے مریم نواز نے اپنی عوامی رابطہ مہم میں شجاع آباد ، ملتان ، جلال پور میں جلسے کئے جبکہ حمزہ شہباز شریف نے بھی یہاں دورے کئے اور سیلاب کے دوران مسلم لیگ (ن) کے رہنماوں نے ہمیشہ بہت کام کیا انہوں نے کہاکہ میں اپنے حلقہ پی پی س214ے منتخب ہوکر تعلیم اور صحت کے مسائل کو حل کرنا چاہتا ہوں اور اس حوالے سے صورتحال بہتر بناناچاہتا ہوں علاوہ ازیں ٹیکنیکل ایجوکیشن اور روزگار کے مسائل کو بھی حل کروں گا ۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Related Articles

Back to top button