سٹیسیاست

گندم کی قیمت میں اضافہ، حکمران عوام سے روٹی کا آخری نوالہ بھی چھین لینا چاہتے ہیں

پی ٹی آئی کی تبدیلی اور پی ڈی ایم میں شامل 13جماعتوں کی کارکردگی قوم کے سامنے ہے

معیشت کو سنبھالنے کے لئے غیر ضروری اخراجات، سرکاری مراعات کا خاتمہ اور کرپشن کا قلع قمع کیا جائے. جماعت اسلامی پنجاب وسطی

لاہور (خبر نگار)امیر جماعت اسلامی پنجاب وسطی محمد جاوید قصوری نے کہا ہے کہ گندم کے نرخوں میں ایک مرتبہ پھر اضافے سے آٹے کی قیمت میں بھی اضافہ ہو گیا ہے۔آٹے کا دس کلو کا تھیلا 1350سے بڑھ کر 1450جبکہ چکی آٹے کی فی کلو قیمت 170روپے ہو گی ہے۔ رہی سہی کسر نان بائی ایسوسی ایشن کی جانب سے روٹی کی قیمت میں بھی اضافے کے اعلان نے پوری کر دی ہے۔ یوں محسوس ہوتا ہے کہ جیسے ملک میں حکومت اور چیک اینڈ بیلنس قائم رکھنے والے ادارے خواب خرگوش میں مصروف ہیں۔انہوں نے ان خیالات کا اظہار منصورہ میں مختلف عوامی وفود سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔ ان کا کہنا تھا کہ پاکستان میں مہنگائی کی انتہا ہو چکی ہے۔ غریب اور متوسط طبقہ ختم ہو چکا ہے۔ حکمرانوں نے عوام کو دکھ اور تکالیف دینے کے سوا کچھ نہیں کیا۔ پی ٹی آئی کی تبدیلی کو بھی دیکھ لیا اور پی ڈی ایم میں شامل 13جماعتوں کی کارکردگی بھی قوم کے سامنے ہیں۔ سب نا اہل ثابت ہوئے ہیں۔جب تک ملک میں حقیقی معنوں میں محب وطن قیادت بر سر اقتدار نہیں آتی اس وقت تک عوامی مسائل حل نہیں ہو سکتے۔ انہوں نے کہا کہ پورا ملک مافیا کے رحم و کرم پر چھوڑ دیا گیا ہے۔ جو جب چاہتا ہے قیمتوں میں اضافہ کر کے عوام کی مشکلات میں اضافہ کر دیتا ہے۔ملک کے اندر صرف فرسودہ اور استحصالی نظام ہے جس سے چھٹکارہ حاصل کرنا ہو گا۔محمد جاوید قصوری نے اس حوالے سے مزید کہا کہ حکمرانوں کی ناکام ترین معاشی پالیسیوں کی بدولت ڈالر 304روپے سے تجاوز کر چکا ہے۔ معیشت آئی ایم ایف کے سہارے زیادہ دیر تک نہیں سنبھالی جا سکتی اس کیلئے ضروری ہے کہ غیر ضروری اخراجات، سرکاری مراعات کا خاتمہ اور کرپشن کا قلع قمع کیا جائے۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Related Articles

Back to top button